پولیس نے مارکھم کے علاقے میں حادثے کے بعد فرار ہونے والی گاڑی کی ویڈیو ریلیز کر دی
پیل ریجن میں جعلی نوٹوں کی گردش کا انکشاف، پولیس کا شہریوں کو ہوشیار رہنے کا انتباہ
دو بچوں کی ماں کانشے کی حالت میں گاڑی چلانے اورایکسیڈنٹ کرنے پر چالان ، اسکار بورو پولیس
November 20, 2017 قومی آواز ۔ ٹورنٹو: پولیس آفیسر کی نشے کی زیادتی سے ہلاکت کے بعد پولیس اہلکاروں کی چیکنگ کا معاملہ زور پکڑ گیا ٹورنٹو پولیس کے ایک اعلامیے کے مطابق ایک پولیس آفیسر کے نشے کی زیادتی کی وجہ سے ہلاکت کے بعد شہری حلقوں میں یہ مطالبہ زور پکڑ رہا ہے کہ پولیس کے اہلکاروں وقتاً فوقتاً چیکنگ کی جائے تاکہ ان کی صحت اور نشے کی کیفیت کی بر وقت جانچ کی جا سکے ۔ یہ معاملہ اس وقت سامنے آیا جب ٹورنٹو پولیس کا ایک آفیسر مائیکل تھامسن نشے کی زیادتی کی وجہ سے اسپتال لایا گیا جہاں وہ ہلاک ہو گیا۔ مذکورہ پولیس آفیسر خود نشے کا تدارک کرنے والی فورس کا رکن تھا ۔اس واقعے کے بعد ٹورنٹو پولیس کی اہلیت اور کارکردگی پر سوال اٹھنے لگے ہیں۔ حکام کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں جلد ہی اقدامات متوقع ہیں جس سے صورتحال بہت ہو جائے گی۔ 
مسی ساگا میں خاتون پر چاقو سے حملہ ، خاتون حملہ آور کو پولیس نے گرفتار کر لیا
اسپیڈینا ریلوے اسٹیشن پر مسافروں پر مرچ اسپرے سے حملہ ، دو مسافر زخمی حملہ آور فرار
وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا استعفیٰ دینے سے انکار
کوئٹہ: پاک - چین اقتصادی راہداری کے حوالے سے مشترکہ ایئرشو
اسلام آباد دھرنا ختم نہ کرانے پر انتظامیہ کو توہین عدالت کا شوکاز نوٹس جاری
زمبابوین صدر کا قوم سے خطاب، استعفے کا ذکر تک نہ کیا

کیا آپ نے روزہ رکھا ہے؟

قومی آواز

(منقول: خضر رانا)

آپ نے روزہ رکھا ہے؟
تروایح پڑھتے ہیں؟ پڑھتے ہیں تو کتنی پڑھتے ہیں آٹھ یا بیس؟
کس مسجد میں تروایح اور نمازیں ادا کرتے ہیں؟ حنفیوں کی؟ دیوبندیوں کی؟ وہابیوں کی؟
کتنے ڈگری پر عشاءپڑھتے ہیں؟۔۔۔۔
روزہ فقہ حنفی کے وقت پر افطار کرتے، رکھتے ہیں یا فقہ جعفریہ کے؟
بڑی عید پے کونسا جانور لیتے ہیں اور کتنے؟
مُنافقت کی بھی کوئی حد ہوتی ہے، یہ وہ سوالات ہیں جو آجکل ہر مرد مومن کی زبان پر ہیں اور ان سوالات کا تعلق جو کہ ثواب، گناہ سے ہے تو ان کے جوابات پاکر ھی اگلے بندے کے کفریہ اور شرکیہ عقائد پر تنقید ہوسکتی ہے
یہ سوالات ہر انسان کی نجی زندگی سے وابستہ ہیں اور ہر کسی کی ذاتی، پرسنل زندگی سے تعلق رکھتے ہیں انکا پوچھنا ایسا ھی ہے کہ کوئی آپ سے آپکے بیڈ روم تک کی رسائی چاہے ؟
ہمارے معاشرے میں لوگ یہ سوالات کبھی نہیں پوچھیں گے کہ آپ کسی کا حق تو نہیں مارتے؟ کسی غریب کی زمین پر ناحق قبضہ تو نہیں کرتے؟ رشوت تو نہیں لیتے؟ ملاوٹ تو نہیں کرتے؟ آپکے ہاتھوں سے کسی انسان کی جان ومال کا نقصان تو نہیں ہوا؟ ظلم تو نہیں کرتے؟ نا انصافی تو نہیں کرتے؟ اپنی نوکری پوری ایمانداری سے کرتے ہیں؟ خیانت تو نہیں کرتے؟ تولنے میں کمی پیشی تو نہیں کرتے؟ قانون کی خلاف ورزی تو نہیں کرتے؟ گھر میں جو آپکے بچے ہیں آپ سے خوش بھی ہیں کہ خالی ڈرتے ھی ہیں ؟ ۔۔۔۔
جوکہ ان سوالات کا تعلق جرائم کی دنیا سے ہے تو ہماری پاکستانی قوم کا ان باتوں سے کوئی تعلق ھی نہیں ہے اور ناھی کوئی خاصی دلچسپی
نہ خدا مسیتے لبھدا
نہ خدا وچ کعبے
نہ خدا قرآن کتاباں
نہ خدا نمازے
سانوں عشق لگا ہے پیارے دا
سانوں پیارے دا دلدارے دا
نہ ربّ عرش معلّے اتے
نہ ربّ خانے کعبے ہُو
نہ ربّ علم کتابی لبھا
نہ ربّ وچ محرابے ہُو
گنگا تیرتھ مول نہ ملیا
پینڈے بے حسابے ہُو
بُلھے شاہ
ﻣﮑّﮯ ﺟﺎﻭﯾﮟ ﺗﮯ ﭘﺘﮭﺮ ﭘﻮﺟﯿﮟ،
ﮔﻨﮕﺎ ﺟﺎﻭﯾﮟ ﺗﮯ پانی
ﭼﻞ ﺑﻠﮭﯿﺌﮯ ﮐﭽﮫ ﺍﯾﺴﺎ ﮐﺮﺋﯿﮯ،
ﻣُﮏ جاوے آنی جانی

قومی آواز